الصلوٰ ۃ والسلام علیک یا رسول اللہ الصلوٰ ۃ والسلام علیک یا حبیب اللہ
Subscribe: PostsComments

رپورٹ تشہیری کارکردگی صوبہ پنجاب

February 15, 2012

پورے پنجاب میں انجمن سرفروشانِ اسلام (رجسٹرڈ)پاکستان نے گزشتہ سال کی طرح امسال بھی جشنِ عید میلادالنبی ﷺ نہایت ہی تزک و احتشام سے منایا ۔موٹر سائیکل ریلی اور مرکزی جلوسوں کے علاوہ اپنے اپنے گھروں،محلوں،روڈز پرپرچم اورچوکوں میں بینرز آویزاں کرکے بے مثال تشہیر کی گئی۔اسکے علاوہ گاڑیوں پر سٹکراورپاکٹ ڈسپلے کارڈزبھی آویزاں کیے گئے۔یہ ساری تفصیل درج کرنے کا مقصد یہ ہے کہ ہر ذاکر کو یہ پتہ چلے کہ ہر شہرمیں انفرادی اور اجتماعی طور پرکس کس انداز سے جشن عیدِ میلادالنبی ﷺِ کی رحمتوں اور برکتوں کو اپنے دامن میں سمیٹنے کی بھرپور کو شش کی گئی۔
فیصل آباد
ہر سال کی امسال بھی فیصل آباد کے ذاکرین نے بھر پور انداز میں عیدِ میلادالنبی ﷺکو عقیدت و احترام سے منایا۔جس کی تفصیل درج ذیل ہے۔
4000 شیشہ سٹکر قلب والے مختلف بسوں،ویگنوں،موٹر سائیکل رکشہ اور دُکانوں پر آویزاں کیے گئے۔
1700چھوٹے پرچم اور 52بڑے پرچم پورے فیصل آبادمیں لگائے گئے۔
500 قلب اسٹینسلزمختلف روڈز پر درختوں اور مین چوکوں میں لگائے گئے۔
200 عدد رکشہ اور ہائی ایس وین پر پینافلیکس بینرز لگائے گئے۔
100 عددکپڑا بینرزسائز3*12مختلف چوکوں اورمیں شاہراہوں پر لگائے گئے۔
1ربیع الاول سے لیکر اب تک ربیع الاول شریف کی خصوصی محافل کا سلسلہ تا حال جاری و ساری ہے۔
اسکے علاوہ مختلف کیبل چینلز پر جشنِ آمدِ رسولﷺ کا ایڈ بھی10 دن کیلئے چلایا گیا۔
24جنوری2012 ؁ء کو استقبالِ ربیع الاول شریف موٹر سائیکل ریلی ڈویژنل سطح پر نکالی گئی جس میں ٹوبہ اور سمندری کے ساتھیوں نے بھی بھرپور شرکت کی۔ یہ ریلی 133موٹر سائیکل اور 1عدد ڈالہ پر مشتمل تھی جس کی عوامی سطح پر بھر پور پذیرائی ہوئی۔
جشن عیدِ میلادالنبی ﷺکا مرکزی جلوس نکالا گیاجس میں 2 بسیں،16مزدے 9کاریں 4رکشے اور 30موٹر سائیکل شامل تھے۔اس میں بھی کثیر تعداد میں موٹر سائیکل اور گاڑیوں پر سٹکر آویزاں کیے گئے جو 4000سٹکر زکے علاوہ تھے۔
سمندری
500چھوٹے پرچم اور10بینرزآویزاں کیے گئے۔
11اور 12 ربیع الاؤل کی درمیانی شب کو 400ساتھیوں نے مشعل بردار جلوس بشمول پرچم نکالا ۔
12ربیع الاول کو مشترکہ جلوس نکالا گیا جس میں 150پرچم استعمال کیے گئے۔
جلوس کے اختتام پر دودھ کی سبیل لگائی گئی۔کیبل نیٹ ورک پر 5دن اشتہارچلایا گیا۔(رپورٹ :۔چودھری صلابت حسین)
جھنگ
800چھوٹے پرچم 18بڑے پرچم اور18 بینرز لگائے گئے۔
11اور 12کی درمیانی شب کو 300ساتھیوں نے مشعل بردار جلوس بشمول پرچم نکالا ۔
شیخ وقاص MPAکے بھائی کی موجودگی میں کیک کاٹا گیااور شرکاء جلوس میں1000کارڈ آغازِمنزل والے تقسیم کیے گئے۔
12ربیع الاول کو 140رکشہ110ٹریکٹر450موٹر سائیکل5کاروں اور 2ڈالوں پر مشتمل عظیم الشان جلوس نکالا گیاجو اپنی نوعیت کا انجمن کی سطح پر نکالا جانیوالا سب سے بڑا جلوس ہے۔(شکیل)
ٹوبہ ٹیک سنگھ
250چھوٹے پرچم25بڑے پرچم اور100 بینرز لگائے گئے۔
ٹوبہ کے ذاکرین کی خصوصیت یہ ہے کہ انہوں نے بڑی محنت سے کنکریٹ پر مشتمل بڑے سائز کا خانہ کعبہ اور گنبدِ خضراء کا بڑا ہی خوبصورت ما ڈل تیار کیا تھاجس کو عوام الناس نے بہت سراہا اورکثیر تعداد میں لوگوں نے جلوس کو دیکھا اور اس میں شرکت کی ۔جلو س میں 700افراد شامل تھے۔جلوس کے خاتمہ پر لنگر کا خصوصی اہتمام کیا گیا تھا۔(ذوالفقار)
سرگودھا
500چھوٹے پرچم اور6 بینرز لگائے گئے۔
11اور 12کی درمیانی شب کو 250ساتھیوں نے منہاج القرآن کے ساتھیوں سمیت مشعل بردار جلوس بشمول پرچم نکالا ۔اس جلوس کی کوریج ایکسپریس چینل پردکھائی گئی ۔
12ربیع ا لاول کو بھی مشترکہ جلوس نکالا گیا جس میں 70رکشہ (یونین صدر کے ساتھ مل کر رکشوں پر پرچم آویزاں کیے گئے)موٹر سائیکل اور مزدے شامل تھے۔
سرگودھا کے ساتھی قلیل تعداد میں ہیں لیکن ان کی خصوصیت یہ ہے کہ جلوس کے دوران یہ ذاکر عوام الناس کی گاڑیوں پر بھی کثیر تعدا د میں پرچم لگاتے ہیں جس سے عجیب سماں ہوتا ہے اور ہر طرف انجمن کے پرچم لہراتے ہوئے نظر آتے ہیں اور یوں محسوس ہوتا ہے کہ جیسے سارا جلوس ہی سرفروشوں کا ہے۔اسکے علاوہ استقلال آباد کالونی میں بھی کثیر تعداد میں پرچم لگائے گئے۔
لاہور
150چھوٹے پرچم35بینرز اور 500قلب اسٹینسلز لگائے گئے۔
3فٹ سائز کے30 بڑے قلب مختلف چوکوں میں لگائے گئے۔
20رکشہ فلیکس اور 2بڑی فلیکس(8*12) چوک میں لگائی گئیں۔
12ربیع الاول کو100موٹرسائیکل6 کاروں اور2 ڈالوں پر مشتمل جلوس دوپہر 2بجے داتا ؒ دربار سے نکالا گیاجس نے پورے شہر کا راؤنڈ لگایا۔
راولپنڈی
100چھوٹے پرچم اور10 بینرز لگائے گئے۔
ہورڈنگ بینرز 5عدد بھی لگائے گئے۔لوکل اخبارات نے کوریج بھی دی۔
12ربیع الاول شریف کو جلوسِ میلاد قائم مقام امیرمولانا سعید احمد قادری کی زیرِ صدارت نکالا گیا جس میں 25موٹر سائیکل اور 10کاریں شامل تھیں جو کہ آستانہ راولپنڈی سے مری روڈ اور پھر امام بری سرکارؒ دربار شریف پر پہنچا جہاں پر محفل پاک منعقد کی گئی۔یہاں سے دوبارہ جلوس آستانہ راولپنڈی پہنچا جہاں پرشرکاء جلوس کو لنگرپیش کیا گیا۔اس جلوس کی خصوصیت یہ ہے کہ اس نے طویل فاصلہ طے کیا۔
مُلتان
300چھوٹے پرچم50 بڑے پرچم اور 12گز سائزکے 35 بینرزلگائے گئے۔اسکے علاوہ گھروں پر بھی پرچم آویزاں کیے گئے۔
11اور 12کی درمیانی شب کو مشعل بردار جلوس نکالاگیا۔جس میں مقامی لوگوں کے تعاون سے خانہ کعبہ کا ماڈل تیا ر کیا گیا تھا ۔اس میں 2ٹرک بھی شامل تھے۔پورے شہر کا راؤنڈ لگایا گیا۔جیو نے کوریج دکھائی۔
12ربیع الاول شریف کو8ٹرک60 موٹر سائیکل6 کاروں پر مشتمل جلوس نکالا گیا جو کہ آستانہ سے شروع ہوکر پریس کلب پر اختتام پذیر ہوا۔جلوس کے دوران آغازِ منزل والے کارڈز بھی تقسیم کیے گئے۔
انفرادی طور پر4000پاکٹ ڈسپلے کارڈزتمام شرکاء کو لگائے گئے ۔اسکی کوریج بھی جیو پر دکھائی گئی۔
شام کو خواتین کی عظیم الشان محفلِ پاک منعقد کی گئی جس میں تقریبا800کے قریب خواتین نے شرکت کی۔2000کے قریب پمفلٹ تقسیم کیے گئے۔
ساہیوال
60چھوٹے پرچم40 بڑے پرچم250 اسٹینسلزقلب والے،شیشہ سٹکر 1000عدد مختلف گاڑیوں پر لگائے گئے۔
آغازِ منزل والے کارڈز 1000عدد تقسیم کیے گئے۔
12ربیع ا لاول کو نکالے گئے مرکزی جلوس کی کوریج بمع تصویرں روزنامہ امن اخبار نے 7-2-12کو شائع کی۔
بورے والہ
500چھوٹے پرچم ،رکشہ پر چھوٹے جھنڈے اور موٹر سائیکل پر جھنڈی لگائی گئی۔اسکے علاوہ 1000سٹکر قلب والا لگایا گیا۔
آستانہ کے باہر شہر کے مرکزی جلوس کیلئے استقبالیہ کیمپ لگایا گیا تھا ۔شہر کے مرکزی جلوس کے قائدین نے استقبالیہ پر انجمن کی کاوش کو سراہا اور خراجِ تحسین پیش کیا اس کے بعدمرکزی جلوس میں شرکت کی گئی جنہوں نے بعدمیں بہت اچھا رسپونس دیا۔
اسی طرح بسالی میں 12 ربیع الاول کو 15 موٹر سائیکل اور 10کاروں پر مشتمل جلوس نکالا گیا۔
واہ کینٹ کے ذاکرین نے 12 ربیع الاول کوخصوصی محفل کی جس میں قائم مقام امیرمولانا سعید احمد قادری نے خصوصی خطاب کیا۔
روہیلانوالی میں شہر کے مرکزی جلوس کے ساتھ 45ذاکرین نے جلوس نکالا۔اسکے علاوہ انہوں نے 25پرچم او4 بینر بھی آویزاں کیے۔
رنگ پور کے ذاکرین نے 25 پرچم لگائے اور گھروں میں محافل کا انعقاد کیا۔
خانیوال کے ذاکرین نے 35روزہ محافل کا اہتمام کیا جن کا سلسلہ تاحال جاری و ساری ہے۔
رحیم یار خان میں بھی عید میلادا لنبیﷺ کا مرکزی پروگرام کیا گیاجس میں 200 افراد اور300 خواتین نے شرکت کی

ضلع مظفر گڑھ میں 11ربیع الاول کو محفلِ پاک کی گئی اور 12 ربیع الاول کو ایک ٹرالی کے ساتھ مرکزی جلوس کے ساتھ شرکت کی۔
بہاولنگر میں بھی گھروں میں محافل کا انعقاد کیا گیا۔
خان پور میں آستانہ تعمیر کیا جا رہا ہے انہوں نے خواتین کے لیے عظیم الشان محفل میلادالنبیﷺ کا پروگرام منعقد کروایا۔
احمد پور کے ساتھیوں نے بہاولپور کے مرکزی جلو س میں شرکت کی۔

جاری کردہ
شعبہ نشرواشاعت پنجاب

Facebooktwittergoogle_plusredditpinterestmailby feather
انجمن سرفروشان اسلام (رجسٹرڈ) پاکستان