الصلوٰ ۃ والسلام علیک یا رسول اللہ الصلوٰ ۃ والسلام علیک یا حبیب اللہ
Subscribe: PostsComments

شب بیداری بسلسلہ شبِ برات فیصل آباد

June 24, 2013

عالمی روحانی تحریک انجمن سرفروشان اسلام (رجسٹرڈ)فیصل آباد آستانہ عالیہ پر شبِ برات کے سلسلہ میں شب بیداری کا خصوصی اہتمام کیا گیا تھا رات 11:30بجے صلوٰۃالتسبیح ادا کی گئی اسکے بعد صلوٰۃ غوثیہ وحضرت بی بی فاطمتہ الزہراء(سلام اللہ علیہا)کے ایصالِ ثواب کیلیے 8خصوصی نفافل ادا کئے گئے جس کے بارے میں آپؓنے فرمایا تھا کہ میں اُس وقت تک جنت میں داخل نہیں ہوں گی جب تک وہ ہر اُس مسلمان کو جنت میں نہ داخل کروالوں جس نے شب برات یہ نوافل ادا کئے ہوں گے۔
محفل پاک کا باقائدہ آغاز تلاوت کلامِ پاک سے قاری طارق محمود قادری نے کیا ۔اسکے بعد حمدِ باری تعالیٰ کی سعادت اطہر اقبال قادری نے حاصل کی ۔نعتِ رسول مقبول بحضور سرورِکون و مکاں عبدالمنان قادری نے پیش کی۔منقبتِ غوثیہ منصب علی قادری اور قصیدہء مُرشدی عبدالمنا ن قادری نے پیش کیا ۔بعد ازاں نئے ساتھیوں کو اجازتِ ذکر قلب حاجی محمد اویس قرنی نے عطاء کی اور ذکرِ لطائف بھی ترتیب دیا۔درودوسلام کے بعد خصوصی دعا وحید انور قادری نے کروائی ۔اختتامِ محفل پر سحری کا خصوصی اہتمام کیا گیا تھا۔
نقیبِ محفل محمد افضال قادری نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہو ئے فرمایا کہ انجمن سرفروشانِ اسلام کا طرہء امتیاز ہے کہ ہر بابرکت موقع پر خصوصی محافل کا انعقاد کیا جاتا ہے یہ سب مُرشدِ برحق حضرت سیّدنا ریاض احمد گو ھر شاھی کی خصوصی نظرِ کرم کے طفیل ہے کہ جنہوں نے ہمیں صحیح معنوں میں اللہ تعالیٰ و رسولِ خدا کی پہچان کروائی جس کی بدولت آج ہم ان مبارک ساعتوں سے فیضیاب ہو رہے ہیں ۔انہوں نے مزید فرمایاکہ اس رات کی فضیلت یہ ہے کہ ایک دفعہ حضر ت موسیٰ ؑ کو میرے رب نے فرمایا کی اے موسیٰ!میں تجھے کچھ عجیب دکھاؤں تو موسیٰ ؑ کوایک پہاڑ پرجانے کا حکم ہوا جو آپؑ کے سامنے شق ہوا اور اُ س کے اندر سے ایک شخص نکلا جو کہ رب تعالیٰ کی عبادت و ریاضت میں مشغول تھا ۔آپؑ کے دریافت کرنے پر اُس نے بتایا کہ میں400 سال سے خدائے واحد کی عبادت کر رہاہوں ۔اُ س کی غذاکیلئے اللہ تبارک وتعالیٰ نے ایک پھل دار درخت کا بندوبست کیا ہوا تھا۔موسیٰ ؑ نے عرض کی یا اللہ اس سے بڑھ کر فضیلت والا کون ہو گا جو 400سال سے تیری عبادت میں مصروف ہے تو جواب دیا گیا کہ موسیٰ ؑ !میں اپنے محبوبﷺکی امت کو ایک ایسی رات عطاء کروں گا جس میں جو بھی امتی 2نفل ادا کرے گا ان دو نوفل کا اجرو ثواب اسکی 400سالہ عبادت سے بڑھ کر ہو گا۔سبحان اللہ !اللہ تعالیٰ نے حضورﷺکے صدقے میں کیا کیا نعمتیں عطاء کی ہیں جن کا کوئی شمار بھی نہیں کر سکتا۔انہیں نعمتوں میں سے ایک نعمت عظمیٰ اسمِ ذات اللہ کا عطاء ہو نابھی ہے جو کہ صرف حضور ختم المرسلین ﷺکو عطا ء ہوا اور آپﷺکے طفیل آپﷺکی امت کو عطاء کیا گیا اور اُسی اسمِ ذات اللہ کا فیضان مرشدِ پاک حضرت سیّدنا ریاض احمد گوھر شاھی نے ہمیں عطاء کیا اور آج انجمن سرفروشانِ اسلام(رجسٹرڈ)بھی اسی اسمِ ذات اللہ کو دلوں میں بسانے کا پیغامِ خاص دے رہی ہے کہ آؤ! اپنے دلوں کی ویران کھیتیوں کو اس اسمِ ذات اللہ سے آباد کر لو اور دنیا اور آخرت میں کامیا بی و کامرانی حاصل کرلو۔
جاری کردہ
شعبہ نشروا شاعت فیصل آباد

Facebooktwittergoogle_plusredditpinterestmailby feather
انجمن سرفروشان اسلام (رجسٹرڈ) پاکستان