الصلوٰ ۃ والسلام علیک یا رسول اللہ الصلوٰ ۃ والسلام علیک یا حبیب اللہ
Subscribe: PostsComments

یوم ِوصال حضرت سیدہ بی بی فاطمۃ الزہرہ سلام اللہ علیہا

June 9, 2016

آج 3رمضان المبارک1437ہجری بمطابق9جون2016؁ء بروز جمعرات سیدۃ النساء فاطمۃ الزہرہ سلام اللہ علیہا کا یوم ِوصال ہے ۔آج کی یہ خصوصی محفل ِپاک آستانہ عالیہ عالمی روحانی تحریک انجمن سرفروشان ِاسلام فیصل آباد پر آپ سلام اللہ علیہا کو خراج ِعقیدت و محبت پیش کرنے کیلئے انعقاد پزیرہے۔ آپ ؓکی عظمت کی سب سے بڑی نسبت یہ ہے کہ آپ سلام اللہ علیہا نبی آخرالزماںﷺکی لخت ِجگر ہیں ۔یہ سب سے بڑی نسبت اور سب سے بڑا مقام ہے ۔دوسری نسبت یہ ہے کہ حضور ﷺکی جتنی آل ہیں ۔وہ سب آپ سلام اللہ علیہا کی اولاد سے ہے ۔حضور ﷺکی جتنی بھی صاحبزادیاں ہیں ۔اُن کی آگے اولاد نہیں ہے ۔جتنی آل ِرسول ﷺہیں ،اُن سب کی والدہ حضرت بی بی فاطمۃ الزہرہ سلام اللہ علیہا ہیں ۔حضور پاک ﷺکو اپنی لخت ِجگر سے اتنی محبت تھی کہ جب کبھی سفر پر جاتے تو سب سے آخر میںا پنی پیاری بیٹی سے ملاقات فرماتے اورواپسی پر سب سے پہلے سیدہ کے گھر تشریف لے جاتے اور خیریت دریافت فرماتے اور بعد میں کسی اور کے ہاں جاتے ۔حضور پاک ﷺنے ارشاد فرمایا کہ میرے پاس ایک ایسا فرشتہ آیا ہے کہ جو اس سے پہلے کبھی نہیں آیااور اُس نے مجھے بشارت دی کہ یارسول اللہﷺ!فاطمہ جنتی عورتوں کی سردار ہیں اور حسن و حسین نوجوانانِ اہل ِبہشت کے سردار ہیں ۔
مرکزی مشیر محمد شفیق قادری نے مزید کہاکہ ایک دفعہ حضور پاک ﷺکو لوگوں کو کھانا کھلانے کیلئے کچھ اناج کی ضرورت تھی۔حضرت سلمان فارسی ؓ،سیدہ کے گھر گئے اور پوچھا کہ گھر میں کھانے کیلئے کچھ ہے ؟کچھ مہمان آئے ہیں ۔کچھ لوگوں کو کھانا کھلانا ہے تو اناج کی ضرورت ہے ۔تو آپ سلام اللہ علیہا فرمانے لگیں کہ حسن ؑاور حسین ؑدو دن سے بھوکے ہیں ۔گھر میں کوئی اناج نہیں ہے ۔یہ چادر لے جائو اور فلاں یہودی کے پاس چلے جائو۔اُس سے کہو کہ یہ چادر لے لو اور اناج دے دو ۔جب حضرت سلمان فارسی ؓاُس کے پاس گئے تو اُس نے پوچھا کہ یہ چادر کس کی ہے ؟تو انہوں نے بتایا کہ سیدہ فاطمۃ الزہرہ ،نبی آخرالزمان ﷺکی شہزادی ہیں ۔یہ چادر اُ ن کی ہے ۔گھر میں اناج نہیں تھا اور حضور پاک ﷺ نے مہمانوں کی تواضع کرنا تھی تو سیدہ نے کہا کہ یہ چادر بیچ کے اس کا اناج لے آئو ۔یہودی کہنے لگا ۔اللہ کی قسم !میں نے توریت میں نبی آخرالزماں ﷺاور اُن کے خاندان کی جو صفتیںپڑھی ہیں۔جو عین حق موجود ہیں ۔جائو یہ چادر بھی لے جائو اور اناج بھی لے جائو ۔جب اناج گھر میں آیا اور سیدہ کو دیا گیا تو سلمان فارسی ؓنے کہا کہ آپ بھی رکھ لیں۔فرمانے لگیں ہم جو چیز اللہ کی راہ میں دے دیتے ہیںاُسے واپس نہیں لیتے۔وہ اناج چادر کے بدلے دیا تھا اور چادر پھر تحفۃ ً دے دی تھی لیکن سیدہ نے اناج نہیں لیا بلکہ سارا اناج حضور پاک ﷺکی بارگاہ میں بھجوا دیا۔یہ سخاوت کا عالم تھا کہ اپنے گھر میںمہمان نوازی کردی اور چیز اپنے گھر میں نہیں رکھی ۔
جب آپ ﷺکا وصال ہونے لگا تو آقاﷺنے سیدہ کے کان میں کچھ کہا جس سے آپ سلام اللہ علیہاغمگین ہو گئیں ،آنکھوں میں آنسو آگئے ۔پھر جب دوبارہ کان میں کچھ کہا توآپ سلام اللہ علیہا خوش ہو گئیں ۔حضرت سیدہ عائشہ صدیقہؓنے جب آپ سلام اللہ علیہا سے پوچھا کہ حضور ﷺنے آپ سلام اللہ علیہا کے کان میں کیا کہا کہ پہلے آپ سلام اللہ علیہا غمگین ہو گئیں اور پھر آپ سلام اللہ علیہا مسکرا دیں ؟تو جواب دیا کہ پہلے میرے والد ِگرامی نبی آخرالزماںﷺنے یہ فرمایا کہ اے فاطمہ!میں عنقریب تم سے جدا ہوجائوں گا۔تو میری آنکھوں میں آنسو آگئے اور میں حضورﷺکی جدائی برداشت نہ کرسکی۔پھر جب دوبارہ انہوں نے فرمایا کہ سب سے پہلے تم مجھ سے ملو گی تو مجھے خوشی ہوئی ۔حضور ﷺکے پردہ فرمانے کے صرف 6ماہ بعد آپ سلام اللہ علیہا کا وصال ہو گیا۔آپ نے وصیت کی تھی میرا جنازہ ،میری تدفین رات کے وقت کی جائے تاکہ کوئی غیر محرم مجھے دیکھ نہ سکے ۔حالانکہ اس دور میں دیے کی روشنی ہوتی تھی اسکے باوجود آپ سلام اللہ علیہا کی تدفین رات کو کی گئی ۔آپ سلام اللہ علیہا کی حیاء اور حرمت کا اللہ تعالیٰ نے اس طرح بندو بست کیا ہے کہ جب آپ سلام اللہ علیہا جنت میں جائیں گی تو آپ سلام اللہ علیہا کی ہمشکل 70ہزرار عورتیں ہوں گی جنکے جھرمٹ میں آپ سلام اللہ علیہا کو لے جایا جائے گاتاکہ کوئی آپ کو پہچان نہ سکے ۔اسی لئے کسی نے کیا خوب کہا ہے کہ
حیاء کے ماتھے کا تاج زہرہ وفا پرستی کی لاج زہرہ
کسی کی بیٹی کو نہ مل سکا ہے ملا ہے تجھ کو جو داج زہرہ
زمانے بھر میں جو بھٹ رہاہے ہے تیرے گھر کا اناج زہرہ
رب نوں سجدہ کرن دی خاطر رات منگ دی اے لمی زہرہ
روز حشر نوں میری وی لاج رکھ لئیں میں تیرے پتراں دا کمی زہرہ
اسکے علاوہ آپ سلام اللہ علیہا پہلی سلطان الفقراء ہیں ۔فقیر بننا ایسے ہی نہیں ہے اس کیلئے بہت سی منازل کو عبور کرنا پڑتا ہے اور آپ سلام اللہ علیہا کی شان یہ ہے کہ آپ سلام اللہ علیہا تمام فقیروں کی سردار ہیں ۔سرکار ِدوعالم ﷺنے ارشاد فرمایامجھے اور فاطمہ کو ایک ہی طرح کی مٹی سے پیدا کیا گیا۔۔آپ سلام اللہ علیہا کی شان لفظوں میں بیان نہیں کی جاسکتی ۔صرف اس سے اندازہ لگا لیں ایک دفعہ آپ کے سر مبارک سے پردہ سرک گیا جس سے دو بال مبارک نظر آنے لگے تو سورج نے اسی وقت سایہ کردیا۔آپ سلام اللہ علیہا کی روح مبارک اللہ نے اپنی شان ِکریمی سے خود قبض فرمائی۔
مرکزی مشیر نے اس بات پر زور دیا کہ ضرورت اس امر کی ہے آج ہم سب اپنی گھر کی خواتین ماں،بہن،بیوی اور بیٹی کو اس روحانی تعلیم سے روشناس کروائیں جو آپ کی شخصیت کا خاصہ ہیں۔ حیائے فاطمہ بہترین زیور ہے اگر آج ہم اپنی خواتین میں حیائے فاطمہ کو اجاگر کریں تو کوئی وجہ نہیں ہے ہم دنیا میں شان و شوکت اور عزت واحترام سے زندگی بسر کرسکیں اور جب ہم اسوہء فاطمہ کو اپنائیں گے تو لازماًہم اپنی اولاد کی تربیت بھی بہترین انداز میں کر سکیں گے ۔
لمحہ ء فکریہ یہ ہے کہ آج ہمارا میڈیا جو طرح طرح کے نت نئے فیشن اور مغربی کلچر کوواضع طور پر پروموٹ کررہا ہے اور فیشن کے نام پر پردے اورپردے داری کو پامال کیا جارہاہے۔لباس ایسا پہنا جا رہاہے کہ پہنا اور نہ پہناایک برابر ہے ۔ہمیں اس شعورکو اجاگر کرنا ہے کہ ہم اسلامی تعلیمات کو اپنا کر عزت سے رہ سکتے ہیں اور سیدہ کے طرزِزندگی سے نئی نسل کو روشناس کروائیں اور لباس ایسا پہنا جائے جس میں حیاء اور پردہ کا خاص خیال رکھا جائے۔یہ صحیح معنوں میں اس بات کی عکاسی ہو گی کہ ہم سیدہ خاتون ِجنت سے دلی محبت رکھتے ہیں ۔اُن کے نقش ِقدم پر چلنے کی آج کے دور میں اشدترین ضرورت ہے ۔اُن کا اپنے بیٹوںکی تربیت،اپنے شوہر ِمحترم کی فرماں برداری اور عزت و احترام اور اپنے والد ِگرامی سے بے پناہ پیارومحبت اور خاندان ،عزیزواقارب،رشتہ داروں اورمحلہ داروں سے حسن ِسلوک کسی سے ڈھکا چھپا نہیں ہے صرف عمل کی ضرورت ہے۔دعاہے کہ مرشد ِپاک کے طفیل ہمیں پنجتن پاک کی سچی محبت اور اُن کی تعلیمات پر صدق ِدل سے عمل کرنے کی توفیق عطا فرمائیں۔
ٓٓٓاس محفل ِپاک میں حمد ِباری تعالیٰ ،نعت ِرسول ِمقبولﷺ،منقبت ِپنجتن پاک ،منقبت ِغوثیہ ؓاور قصیدہ ء مرشد ی کی سعادت محمد رفیق قادری،منصور احمد،اطہر اقبال قادری اور محمد جمیل قادری نے حاصل کی۔حلقہء ذکرشیخ محمد عظمت قادری نے ترتیب دیااور دعائے خیروبرکت ستارالحق قادری نے کروائی۔

Facebooktwittergoogle_plusredditpinterestmailby feather
انجمن سرفروشان اسلام (رجسٹرڈ) پاکستان